دیوگن کو ’گلوان وادی‘ پر فلم بنانے کا اعلان کرنا مہنگا پڑ گیا

ممبئی: بالی ووڈ اداکار اجے دیوگن کو گلوان وادی واقعے پر فلم بنانے کا اعلان کرنا مہنگا پڑ گیا۔

تفصیلات کے مطابق بالی ووڈ اداکار اجے دیوگن نے بھارت اور چین کے درمیان وادی گلوان میں جھڑپ کے دوران ہلاک ہونے والے 20 بھارتی فوجیوں کی ہلاکت پر فلم بنانے کا اعلان کیا تو سوشل میڈیا پر صارفین نے انہیں آڑے ہاتھوں لے لیا۔

اجے دیوگن کے اس اعلان کے بعد پاکستانی اور بھارتی سوشل میڈیا صارفین دونوں کی جانب سے اداکار کے اس خیال کو ناصرف مضحکہ خیز قرار دیا گیا بلکہ مختلف کمنٹس کرکے ان کا مذاق اڑایا گیا۔

ایک صارف اشوک سوین نے لکھا کہ ’صرف بالی ووڈ ہی جانتا ہے کہ بھارت کے مصائب سے پیسہ کیسے کمایا جاتا ہے۔‘

ایک اور صارف توصیف ہمایوں نے لکھا کہ ’ایک تھی گلوان وادی ٹائٹل زیادہ اچھا رہے گا۔ کسی نے کہا کہ ’یہ ایک سچی کہانی ہوگی یا مودی میڈیا کہانی پر مبنی ہوگی۔‘

خاتون صارف پریل کا کہنا تھا کہ فلم کا اختتام یہ ہوگا کہ اجے دیوگن مودی سرکار کی جانب سے بند کی گئی 59 ایپلی کیشن کو اپنے پاس سے ڈیلیٹ کردیں گے۔

سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ اور یہ رہی ناظرین بھارتی آرمی کی چین کے خلاف آخری امید۔‘

سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ بھارتی فوج چین سے بری طرح ہار گئی اور بھارتی افواج صرف بالی ووڈ میں ہی چین کو شکست دے سکتی ہے۔

(Visited 176 times, 1 visits today)

Also Watch