attack on saudi arabia soil

سعودی عرب کی ایسٹ ویسٹ پائپ لائن کے دو پمپنگ سٹیشنوں پر حوثی ملیشیا کے دہشتگردوں نے ڈرونز کے ذریعے حملہ کر دیا۔ تیل کی تنصیبات پر حوثی باغیوں نے 7 ڈرونز کے ذریعے ان تنصیبات کو نشانہ بنایا۔

سعودی وزیر خالد الفالح کے مطابق ڈرون حملوں کا نشانہ تیل کی دولت سے مالا مال مشرقی سعودی صوبے سے گزرنے والی پائپ لائن تھی۔ سعودی تیل تنصیبات خام تیل ایکسپورٹ کرنے والی بڑے حکومتی ادارے آرامکو کے زیر کنٹرول ہیں۔

سعودی وزیر تیل خالد الفالح کے مطابق ایک مقام پر ڈرون گرنے سے آگ بھی بھڑک اٹھی۔ اس پمپنگ اسٹیشن سے خام تیل کی سپلائی ینبع کی بندرگاہ تک پہنچائی جاتی ہے۔ ڈرون حملے سے لگنے والی آگ پر قابو پایا جا چکا ہے۔ ان حملوں کے بعد مذکورہ پائپ لائنوں سے تیل کی ترسیل وقتی طور پر روک دی گئی ہے۔ 

 وزیر برائے توانائی کا کہنا تھا کہ حملے کے بعد پائپ لائنوں کو معمولی نقصان پہنچا ہے جسے ٹھیک کرنے کی کوششش کی جا رہی ہے۔ دہشتگردوں کا ہدف عالمی سپلائی لائن کی چین تھی۔ اس حملے کے باوجود تیل کی ایکسپورٹ دنیا بھر کو جاری رہے گی۔

دوسری طرف حوثی ملیشیا کے ٹیلی وژن نے دعویٰ کیا ہے کہ ڈرون حملوں کے ذریعے سعودی عرب کی اہم تنصیبات کو ٹارگٹ کیا گیا۔ سعودی تنصیبات کی کوئی تفصیل بیان نہیں کی تھی۔ المصیرہ ٹیلی وژن کی رپورٹ کے مطابق سات ڈرونز کے ذریعے مختلف اہداف کو نشانہ بنایا گیا۔

(Visited 188 times, 1 visits today)



Also Watch

LEAVE YOUR COMMENT