Wife Filed a Petition against Husband

ہائی کورٹ نے بیوی کو نازیبا میسج بھیجنے والے شوہر کی درخواست ضمانت مسترد کر دی اور جیل واپس بھیجنے کا حکم دے دیا۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ لاہور ہائیکورٹ میں ملزم قمر کی درخواست ضمانت پر جسٹس وحید احمد خان نے سماعت کی۔ملزم کی بیوی شاہدہ بی بی کی جانب سے ایڈوکیٹ الطاف حسینعدالت میں ہیش ہوئے۔شاہدہ بی بی نے شوہر کے خلاف تھانے پاکپتن میں مقدمہ درج کروایا تھا۔جس میں شکایت کی گئی تھی کہ میرا شوہر قمر موبائل پر نازیبا پیغام بھیجتا تھا،استغاثہ نے عدالت میں موقف اپنایا کہ سیشن عدالت بھی ملزم کی درخواست ضمانت مسترد کر چکی ہے اور قبل ازیں ہائیکورٹ سے ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست بھی مسترد ہوئی تھی۔

عدالت نے جمعہ کے روز بیوی کو نازیبا میسج بھیجنے والے شوہر کی درخواست ضمانت خارج کر دی ہے۔جب کہ دوسری جانب سائبر کرائم کے وکیل ذیشان ریاض کا کہنا تھا کہ کسی سے بات کے دوران اگر سامنے والا میسج کرنے سے منع کر دے اور پھر بھی میسج کیا جائے تو یہ ہراسمنٹ کے زمرے میں آتا ہے جس کی سزا تین سال قید ہے۔ جب کہ جعلی پروفائل سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اب فیک پروفائلز بنانا لوگوں کا مشغلہ بن چکا ہے لیکن اس پر کاروائیاں کی جا رہی ہیں۔

(Visited 155 times, 1 visits today)



Also Watch

LEAVE YOUR COMMENT